اسلام آباد پولیس عثمان مرزا کو سزائے موت دلوانے کے لیے متحرک ہو گئی

عثمان مرزا کو سزائے

پاکستان ٹائمز! ایس ایس پی انویسٹی گیشن عطاالرحمان نے کہا ہے کہ اسلام آباد واقعے میں لڑکا لڑکی کو کیس کا حصہ بنایا ہے اور کیس میں سزائے موت کی دفعات بھی شامل ہیں۔نجی ٹی وی سے گفتگو میں ایس ایس پی انویسٹی گیشن نے کہا کہ لڑکا اور لڑکی کیس کا حصہ بننے کے لیے تیار ہو گئے ہیں۔دونوں کو پروٹیکشن کے لیے کہا گیا ہے تاہم دونوں نے کہا ہے کہ اگر ضرورت ہو گی تو پروٹیکشن لیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم اپنے طور پر کیس کو مضبوط بنا کر پیش کریں گے۔بہت مضبوط مقدمہ تیار کیاگیا ہے ، ملزمان کو فائدہ نہیں اٹھانے دیں گے۔ایس ایس پی کے مطابق کیس میں سزائے موت کی دفعات بھی شامل ہیں، ایف آئی آر میں کمزوری نہیں ہے۔تحقیقات میں آنے والی مزید باتوں کو بھی کیس کا حصہ بنائیں گے۔آئی جی اسلام آباد کا کہنا ہے کہ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد پولیس متحرک ہوئی اور تمام ملزمان گرفتار کر لیے گئے ہیں۔چاہتے ہیں اسلام آباد تشدد کیس کو ٹیسٹ کیس بنائیں اور ویڈیو کی فرانزک تحقیقات ہوں گی۔اسلام آباد پولیس کیس کو منطقی انجام تک پہنچائے گی۔ہمارا کام ہے مضبوط کیس عدالت لے کر جائیں تاکہ ملزمام کو سزا ہو اور تشدد کیس کے ملزمان کو سزائے موت بھی ہو سکتی ہے، واضح رہے کہ معاملے کا وزیر اعظم عمران خان نے بھی نوٹس لیا تھا، آئی جی اسلام آباد نے اب تک ہونیوالی پیشرفت پر وزیر اعظم کو تفصیلات سے آگاہ کیا ۔

Leave a Comment